Home / سرائیکی شاعری / جِتھ محمد دی آل ہوندی ہے غزل | صفدر کربلائی

جِتھ محمد دی آل ہوندی ہے غزل | صفدر کربلائی

غزل

جِتھ محمد دی آل ہوندی ہے

اُتھاں اللہ دی گال ہوندی ہے 

 

پُتر پیو کوں جواب ڈیندے ہن

دھی سراپا سوال ہوندی ہے

 

عشق ہر کہیں کوں راس نیں آندا

اے طبیعت دی گال ہوندی ہے

 

روح بدن توں جدا نا کر صفدر

بیڑی دریا نال ہوندی ہے

صفدر کربلائی

Check Also

سرائیکی شاعر منشو بھٹہ سئیں ہونڑی دی ہک نظم ”سندھو دی منت“

سرائیکی نظم سندھو دی منت تیکوں تیڈیاں سپیاں دا واسطہ ساڈے پاسے بھاہ ءے ساڈے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔