Home / سرائیکی / ہنڑ بدن تیڈی بھور جتنا ہے | سلیم طاہر قیصرانی

ہنڑ بدن تیڈی بھور جتنا ہے | سلیم طاہر قیصرانی

غزل

ہنڑ بدن تیڈی بھور جتنا ہے
آ، لہا ونج توں پور جتنا ہے

بھاندے چہرے سنجانڑ وچ آندن
اکھ دے مطلع تے کور جتنا ہے

حسن ملسی وی،لہذے کھن کیتے 
اے جہاں توں پھلور جتنا ہے


اپڑیں اندر نئیں چن لکا سگدا
جھڑ وی کالا شمور جتنا ہے

لوک سارے ایں وبلیے وبلیے ہن
چپ سنڑیندی اے شور جتنا ہے

اپڑیں وانگوں او آپ ٹر سگدے
کون ہے اوندی ٹور جتنا ہے

سلیم طاہر قیصرانی

Check Also

سرائیکی افسانہ "ڈِڈھ دا دوزک” اکھ دی بُکھ وچوں | طلعت نقی

اوتری ، نامُراد ، لوبھِنڑ چور رَن ، تیکوں شرم نئی آئی ، ایویں کریندییں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

error: معذرت سئیں نقل دی اجازت کائینی